صفحہ اول » انجینرنگ سے متعلق پیشے » کمپیوٹر سائنس اور انجینئرنگ

کمپیوٹر سائنس اور انجینئرنگ

۔سرٹیفکیٹ کورسز

کراچی،لاہور، راول پنڈی، اسلام آباد، حیدر آباد، پشاور، کوئٹہ اور ملک کے دوسرے بڑے شہروں میں کمپیوٹر کی تعلیم کے نجی و نیم سرکاری ادارے مندرجہ ذیل شعبوں میں ۳ ماہ سے ایک سال تک کی میعاد کے سرٹیفکیٹ کورسز کی تربیت فراہم کرتے ہیں۔
1۔کمپیوٹر آپریٹر 2۔کمپیوٹر کونیسپٹ 3۔کمپیوٹر پروگرامنگ4۔ایڈوانس ٹریننگ ان کمپیوٹر پروگرامنگ
ان کورسزمیں داخلے کے لیے بنیادی اہلیت دسویں یا بارہویں جماعت کے امتحان میں کامیابی ہے۔ کمپیوٹر کی تعلیم کے معیاری اداروں میں داخلے سے پہلے میلانِ طبع کا امتحان ہوتا ہے اور صرف انھی امیدواروں کو داخلہ دیا جاتا ہے جنھوں نے یہ امتحان کامیاب کیا ہو۔
ان کورسز میں داخلے کے لیے صرف ان ہی اداروں سے رجوع کرنا چاہیے جو متعلقہ صوبے کے فنی تعلیمی بورڈ سے منظور شدہ ہوں اور جن کے امتحان فنی تعلیمی بورڈ کی نگرانی میں ہوتے ہوں۔ ایک کورس کے اخرجات 3 سے4 ہزار روپے کے درمیان ہیں۔

۔ڈپلومہ کورسز

کمپیوٹر سائنس میں ایک سال یا دو سال کا ڈپلوما کورس، صوبائی ٹیکنیکل بورڈ سے منظور شدہ اداروں میں کرایا جاتا ہے۔ اس کورس کی تکمیل کے بعد امیدوار، کمپیوٹر کی مختلف زبانوں اور ان کے استعمال سے واقف ہوجاتا ہے۔ کمپیوٹر پروگرام تیار کرسکتا ہے، اپنے ادارے کے لیے موزوں کمپیوٹرکا انتخاب کرسکتا ہے اور مائیکرو کمپیوٹر کو بہ خوبی استعمال کرسکتا ہے۔
اس کورس میں داخلے کے لیے امیدوار کو کم از کم بارہویں جماعت کا میاب ہونا چاہیے۔ چند اداروں میں داخلے سے پہلے میلان طبع کا امتحان ہوتا ہے اور کامیاب ہونے والے امیدواروں کو ہی داخلہ دیا جاتا ہے۔ تعلیمی اخراجات ایک ہزار ماہانہ کے لگ بھگ ہیں جن میں امتحان کی فیس بھی شامل ہے۔
۔بی ایس سی کمپیوٹرسائنس
کمپیوٹر سائنس میں تین سال کا ڈگری کورس کراچی اور لاہور میں فاسٹ آئی سی ایس کے تحت کرایا جاتا ہے۔ فاسٹ آئی سی ایس کراچی کا قیام1985ء میں عمل میں آیا جب کہ لاہور میں فاسٹ ایس اے ایچ انسٹی ٹیوٹ آف کمپیوٹر سائنس نے جنوری 1991ء سے تدریس کا آغاز کیا۔
فاسٹ انسٹی ٹیوٹ آف کمپیوٹر سائنس میں تین سالہ ڈگری کورس کی کامیاب تکمیل پر جامعہ کراچی،بی ایس سی کمپیوٹر سائنس کی سند جاری کرتی ہے۔ انسٹی ٹیوٹ میں آئی بی ایم 4331 مین فریم کمپیوٹر، اے ایس 400، منی کمپیوٹر آر ایس 6000، منی کمپیوٹر اور پرسنل کمپیوٹرز تمام ضروری سہولتوں کے ساتھ نصب ہیں۔ علاوہ ازیں انسٹی ٹیوٹ کی اپنی الیکٹرونک لیبارٹری اور ٹیکنیکل لائبریری بھی ہے۔ انسٹی ٹیوٹ آف کمپیوٹر سائنس میں داخلہ اہلیت کی بنیاد پر ہوتا ہے۔
بنیادی اہلیت انٹرمیڈیٹ (سائنس، آرٹس، کامرس) سیکنڈ ڈویژن، ریاضی میں 45 فی صد یا اس سے زیادہ نمبروں کے ساتھ کامیابی ہے۔ امیدواروں کو داخلے کا امتحان کامیاب کرنا ہوتا ہے۔ اس امتحان میں کامیاب امیدواروں کا انٹرویوہوتا ہے۔ داخلہ صرف اور صرف اہلیت کی بنیا د پر دیا جاتا ہے۔
تین سالہ ڈگری کورس کے اخراجات 35سے 40 ہزار روپے تک ہیں۔ لیکن جس امیدوار کو اہلیت کی بنیاد پر منتخب کرلیا جاتا ہے اگر وہ انسٹی ٹیوٹ کے بھاری اخراجات برداشت نہ کرسکے تو مالی اعانت کی درخواست کرسکتا ہے۔ ایسے امیدواروں کے تعلیمی اخراجات کے لیے انھیں وظیفہ دیا جاتا ہے۔
مزید معلومات اس پتے پر خط لکھ کر حاصل کی جاسکتی ہے: